ہم آزاد نگری کے غلام شہری ہیں کالم نگار عبیدالرحمان عقیل ندویؔ



★ہم آزاد نگری کے غلام شہری ہیں ★
بروز بدھ ۲۹ جولائی ۲۰۱۵ء
 بمقام لکھنؤ
عبیدارحمان عقیل ندویؔ
یہ غلاموں کا شہر ہے ........بکریوں کا نگر ہے ........یہاں کھالوں کی نہیں بالوں کی بھی قیمت لگائی جاتی ہے ........یہاں انسان نہیں حیوان پالے جاتے ہیں .........بندگی نہیں درندگی سکھائی جاتی ہے .......عیاشی کو فروغ دیا جاتا ہے ........سہاگن کے سہاگ لوٹے جاتے ہیں ........نوشیزاؤں کے ذریعہ چوکھٹ کو زینت بخشی جاتی ہے ........بے سہاروں کو غلامی کی بیڑیوں میں جکڑا جاتا ہے .......ظلم وسفاکیت کو فروغ دیا جاتا ہے .......اور امن سلامتی کےصرف بھجن گائے جاتے ہیں ...........!  



بقیہ مضمون کیلئے انتظار کریں.
 

نوٹ


"لفظ بولتے ہیں " ویب سائٹ پر شائع ہونے والی تمام نگارشات قلم کاروں کی ذاتی آراء پر مبنی ہیں۔ ادارہ کا ان سے متفق ہونا ضروری نہیں۔


ہمیں فالو کریں

گوگل پلس

فیس بک پیج لائک کریں


بذریعہ ای میل حاصل کریں